بے روزگاری، خود اعتمادی کا فقدان خود کشی کے بڑے اسباب: مقریرین

بے روزگاری، خود اعتمادی کا فقدان خود کشی کے بڑے اسباب: مقریرین

چترال (محکم الدین) چترال میں خود کشی کے تشویشناک حد تک بڑھتے ہوئے واقعات کے سد باب کیلئےایک روزہ انسداد خودکشی و آگہی سمینار چترال رورل سپورٹ پروگرام کے زیر اہتمام چترال کے ایک مقامی ہوٹل میں منعقد ہوا۔
اس سمینار کے مہمان خصوصی انجینئر فضل ربی جان اور صدر محفل کے فرائض اسسٹنٹ کمشنر چترال محمد ثقلین نے انجام دی جبکہ سمینار میں اسلام آباد سے تعلق رکھنے والی چار ایم پی ایز عائشہ خٹک، عائشہ نعیم ، ناز اور مدیحہ نثار نے خصوصی طور پر شرکت کیں۔ سمینار سے حنا قریشی، ارم ممتاز، عاصمہ حسنات اور ڈاکٹر عائزہ یزدانی ایجوکیشنل سائیکالوجسٹ نے خطاب کیا۔
قبل ازین چترال رورل سپورٹ پروگرام کے نائب صدر غلام مصطفی ایڈوکیٹ نے اپنے خطاب میں مہمانوں کو خوش آمدید کہا اور سی آر ایس پی کے قیام کے مقاصد اور اب تک ہونے والے سرگرمیوں پر تفصیل سے روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ سی آر ایس پی اب تک انسداد خود کشی کے حوالے سے قومی سطح کے چار سمینار منعقد کر چکا ہے اور موجودہ سمینار ان سب میں نہایت اہمیت کی حامل ہے۔
ڈاکٹر عائزہ یزدانی نے اپنے طویل تجربے اور علم کی بنیاد پر چترال میں خود کشی کے وجوہات کا تجزیہ کیا اور اسباب سے متعلق اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ خود کشی فوری طور پر رونما ہونے والا عمل نہیں ہے بلکہ یہ مسلسل منفی رویوں اور حالات کے نتیجے میں وقوع پذیر ہوتا ہے۔
کسی فرد کی خاموشی، تنہائی پسندی، باتوں میں مایوسی، حرکات و سکنات میں بے ترتیبی اس کی ابتدائی علامات میں سے ہیں۔ جن کی جانکاری بہت ضروری ہے تاکہ اسکا بروقت علاج کیا جا سکے۔ انہوں نےکہا کہ بچوں کے ساتھ ہمیشہ سختی کا رویہ انہیں ذہنی دباو کا شکاربنا سکتا ہے اور یہ عمل بھی خود کشی کی طرف راغب کرنے میں معاون ثابت ہو سکتا ہے۔
مہمان خصوصی انجینئر فضل ربی جان نے کہا کہ خود کشی کے حوالے سے چترال کامنفی چہرا دنیا کے سامنے آنا افسوسناک ہے تاہم اس کی ایک بڑی وجہ بیروز گاری اور خود اعتمادی کا نہ ہونا ہے۔ نوجوان جتنے کاروبار اور آمدنی پیدا کرنےمیں شب و روز محنت کو اپنا شعار بنائیں گے۔ خود کشی کی طرف سوچنے کا منفی عمل کم ہو جائے گا۔ نوجوان لڑکے لڑکیوں کو سکل کی طرف توجہ دینےکی اشد ضرورت ہے۔
صدر محفل اسسٹنٹ کمشنر چترال محمد ثقلین چترال میں خود کشی کے حوالے سے تفصیلی ریکارڈ پیش کی اور اس کے سد باب کیلئے آگہی سمینار ، ورکشاپ اور کانفرنس کی ضرورت پر زوردیا، اس موقع پر ایگزیکٹیو ممبر سی آر ایس پی اشفاق احمد، مختار ملک نے بھی سمینار سے خطاب کیا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.