PESCO, SRSP reach accord on distribution of electricity

باخبر ذرائع کے مطابق گولین گول سے بجلی کی ترسیل کے سلسلے میں ایس آر ایس پی اور پیسکو کے حکام کے درمیان معاہدہ طے پانے کے بعد گرڈ اسٹیشن کے ذریعے بجلی کی فراہمی شروع ہوگی جوکہ واپڈا کے لیبر یونین کے تحفظات کی وجہ سے تعطل کا شکار تھا جس کی وجہ سے گولین گول 2میگاواٹ ہائیڈرو پاؤر اسٹیشن میں مطلوبہ مقدار میں بجلی پیدا ہونے کے باوجود چترال ٹاؤن اورمضافات کو بجلی فراہم نہیں ہورہی تھی۔ ذرائع نے مزید بتایاکہ گزشتہ دنوں گولین بجلی گھر کے تمام اسٹیک ہولڈروں کے ایک اجلاس میں یہ بھی متفقہ طور پر فیصلہ ہواکہ بجلی گھر کو جس مقصد کے لئے تعمیر کیا گیا تھا، ( ہسپتال ،دفترات ،بازار اور آس پاس علاقے) مقصد کے لئے استعمال کیا جائے گااجلاس میں سرکاری حکام بھی موجود تھے۔]]>

4 Replies to “PESCO, SRSP reach accord on distribution of electricity”

  1. The area of KHOW is hanging between in: it was high time that the supply of electricty right from BARENIS to KARI being in their jurisdiction because they are more deserving than the Chitral Town.

  2. Good. why the district nazim play no role in resolving such issues? It should be his responsibility to facilitate people as nazim.

  3. Is this the treaty of Versailles or the NATO accord? What nonsense is this? Let electricity be provided to the town from this 2 mw powerhouse. Fed up with these shitty accords and meetings and conferences for tiny issues. No action, only accords all the time.

Leave a Reply

Your email address will not be published.